آن لائن بینکنگ وخریداری سےفراڈمیں اضافہ،40 ہزارشکایات

Muhammad Dastagir 26 Feb, 2021 سائنس وٹیکنالوجی

کراچی: آن لائن بینکنگ اور خریداری کی وجہ سے بینکنگ سسٹم ہونے کی وجہ سے لوگوں کے ساتھ مالیاتی فراڈ میں 63 فیصد اضافہ ہوگیا۔کورونا وائرس کی وبا کے دوران ڈیجیٹل لین دین اور آن لائن بینکاری بڑھنے کے ساتھ بینکوں کی خدمات سے متعلق صارفین کی شکایات میں بھی غیر معمولی اضافہ ہوگیا۔ بینکنگ محتسب کی رپورٹ کے مطابق سال 2020ء کے دوران بینکنگ محتسب کو بینک صارفین کی 25 ہزار 500 شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 84 فیصد شکایات کا ازالہ کرتے ہوئے صارفین کو مجموعی طور پر 59 کروڑ 80 لاکھ روپے کا ریلیف دلایا گیا۔2019ء میں 15 اور 2020ء میں 25 ہزار شکایات موصول بینکنگ محتسب محمد کامران شہزاد نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے سالانہ رپورٹ جاری کی اور بتایا کہ بینکنگ محتسب کو 2019ء میں 15 ہزار 600 شکایات موصول ہوئیں تاہم 2020ء میں شکایات کی تعداد 25 ہزار 500 تک پہنچ گئی جو ایک سال میں 63 فیصد اضافہ ظاہر کرتی ہیں، بینک صارفین کی شکایات میں نمایاں اضافہ ڈیجیٹل بینکنگ کی وجہ سے ہوا۔ رواں سال شکایات کی تعداد 40 ہزار تک پہنچ جائے گی رواں سال کے پہلے دو ماہ کے دوران جس تیزی سے شکایات بڑھ رہی ہے اس سے اندیشہ ہے کہ رواں سال شکایات کی تعداد 40 ہزار تک پہنچ جائے گی۔