نئی قسم کے کیمیائی عمل ’’آرگینوکیٹالیسس‘‘ کی دریافت پر کیمسٹری کا نوبل انعام

malik shahid 10 Oct, 2021 سائنس وٹیکنالوجی

اسٹاک ہوم: کیرولنسکا انسٹی ٹیوٹ، سویڈن کی نوبل اسمبلی نے اس سال کیمیا (کیمسٹری) کے نوبل انعام کا اعلان کردیا ہے جس کے مطابق ’’ایسمٹرک آرگینو کیٹالیسس‘‘ کہلانے والے کیمیائی عمل کی دریافت پر جرمنی کے بنجمن لسٹ اور امریکا کے ڈیوڈ میکملن کو مشترکہ طور پر کیمیا کے نوبل انعام کا حقدار قرار دیا گیا ہے۔ یہ عمل انگیزی (کیٹالیسس) کا بالکل نیا عمل ہے جس سے نت نئے مرکبات کی تیاری ممکن ہوئی ہے جن میں نئی ادویہ سے لے کر سورج کی روشنی سے بہتر طور پر بجلی بنانے والے مرکبات تک شامل ہیں ۔1990 کے عشرے میں بجنمن لسٹ اور ڈیوڈ میکملن نے ایک دوسرے سے جداگانہ طور پر تقریباً ایک ہی وقت میں آرگینوکیٹالیسس کا عمل دریافت کیا، جس پر ان دونوں کو اس سال کیمسٹری کے نوبل انعام کا مشترکہ حقدار قرار دیا گیا ہے جس کے تحت انعام کی رقم ان میں مساوی تقسیم ہوگی۔