رحیم یارخان،آوارہ کتوں کی بھرمار،شہریوں پرحملے،انتظامیہ لاتعلق

Muhammad Dastagir 26 Feb, 2021 علاقائی

رحیم یارخان (نعیم بشیرچودھری سے) شہریوں پرآوارہ کتوں کے حملے جاری ہیں۔24 گھنٹوں کے دوران 2 کمسن بچوں سمیت 13 افراد کو کاٹ کر شدید زخمی کر دیا ۔ سلطان پور کے 10 سالہ ناصر‘ حبیب کالونی کے12 سالہ ریحان‘ سنی پل کے 37 سالہ عمران‘ گلشن عثمان کے 24 سالہ رزاق‘ چک 81 کے 43 سالہ بشیر احمد‘ پل ڈگا کے25 سالہ سبین بی بی‘ چک 14کے35 سالہ عمران‘ بستی لڈھا آرائیں کے 26 سالہ جلیل احمد‘ آدم صحابہ کے 45 سالہ اللہ ودھایا‘موضع کاچھا کے19 سالہ وسیم‘ چک 123کے 50 سالہ شوکت علی‘ پیر ولی محمد سلطان کے33 سالہ ایاز احمد‘ خیر پور کھڈالی کے50 سالہ قدیر بخش کو گلی سے گزرنے کے دوران آوارہ کتوں نے کاٹ کر شدید زخمی کر دیا‘ ورثاء نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں انہیں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔دوسری طرف ضلع رحیم یار خان میں آوارہ کتوں کی بھرمار ہے اور عوام شدید پریشانی میں مبتلا ہیں ۔ یونین کونسل امین گڑھ‘ خیرپور‘مو مبارک‘ امان گڑھ‘ موضع صادقپور‘ سلطان پور‘ تھلی چوک‘ تھلواڑی‘ کوٹ درعیہ اور ملحقہ علاقوں میں آوارہ کتے عوام کو پریشان کرتے دکھائی دیتے ہیں جبکہ آوارہ کتوں کے حملوں میں درجنوں افراد جن میں بچے‘جوان اور خواتین سمیت کئی لوگ شدید زخمی ہوئے ہیں اور گزشتہ روز ایک ویڈیو بھی منظرعام پر آئی ہے جس میں واضح طور پر دیکھا جا سکتا ہے کے دس سے بارہ کتے شہریوں پرحملے کیلیے ایک ساتھ موجود ہیں ۔ افسوس کی بات ہے کہ ایک طرف تو سرکاری ادارے اعلی حکام کو سب اوکے کی رپورٹ جاری کرتے ہیں تو دوسری طرف عوامی بنیادی مسائل جوں کے توں ہیں‘ عوام نے اعلیٰ حکام سے اس اہم مسئلے پر اصلاح و احوال کا مطالبہ کیا ہے۔