ملتان ڈویژن: گلی محلوں کی دکانوں پرقیمتوں کی خفیہ مانیٹرنگ کا فیصلہ

Muhammad Dastagir 19 Apr, 2021 علاقائی

ملتان (اردوویب نیوز )کمشنر ملتان ڈویژن جاوید اختر محمود نے سپیشل خفیہ ٹیموں کے ذریعے گلی محلوں کی دکانوں پر قیمتوں کی مانیٹرنگ کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سے سستی چینی لیکر عوام کو مہنگے داموں بیچنے والے قومی مجرم ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کی کارکردگی بارے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔کمشنر جاوید اختر محمود نے کہا کہ اب گرانفروشوں کیخلاف ایف آئی آر درج کروانے سے بڑھ کر گرفتار کیا جائے۔کسی گرانفروش سے ہرگز نرمی نہیں برتی جائے۔مصنوعی مہنگائی کرنے والے مافیا سے آہنے ہاتھ سے نمٹیں۔تمام پرائس کنٹرول مجسٹریٹس ہر صورت فیلڈ میں نظر آئیں اور انکی لوکیشن مانیٹر کی جائے۔کمشنر نے شوکاز کے جواب کی مدت پوری ہونے پر پرائس کنٹرول مجسٹریٹس بارے بھی رپورٹ طلب کی۔انہوں نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر اپنے اضلاع کے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کی رپورٹ کمشنر آفس بھجوائیں۔ واضح رہے کہ کمشنر نے ناقص کارکردگی دکھانے والے 69 پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو شوکازدیا تھااور تسلی بخش جواب نہ دینے والے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کیخلاف پیڈا ایکٹ کے تحت کارروائی کا عندیہ دیا تھا۔ڈپٹی کمشنرز نے گرانفروشی، ذخیرہ اندوزی کے خلاف جاری مہم پر کمشنر کو بریفنگ دی۔ڈی سی ملتان علی شہزاد نے کہا کہ کا و نٹر بڑھانے سے 3000 کلو چینی ایک رمضان بازار میں دوپہر تک خریدی گئی۔سبسڈائزڈ ریٹس کی وجہ سے رمضان بازاروں میں شہریوں کا رش ہے جبکہ سہولیات فراہم کرنے کی ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں۔اجلاس میں اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز ویڈیو لنک پر موجود تھے۔