ٹی ایل پی کاملک گیر احتجاج،پولیس کانسٹیبل جاں بحق،ملتان میں جھڑپیں

Muhammad Dastagir 13 Apr, 2021 عالمی

اسلام آباد،لاہور،کراچی،ملتان(اردوویب نیوز)تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے سربراہ علامہ سعد حسین رضوی کی گرفتاری کے خلاف ملک کے مختلف شہروں میں شروع ہونے والا احتجاج دوسرے روز بھی جاری رہا اور مظاہرین اور پولیس کے درمیان کشیدگی سے ایک پولیس ہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔ لاہور پولیس کے ترجمان رانا عارف نے بتایا کہ لاہور کے شاہدرہ میں جھڑپوں کے دوران مظاہرین کے تشدد سے ایک پولیس اہلکار جاں بحق ہوگیا۔ بعد ازاں شاہدرہ پولیس نے ٹی ایل پی کے رہنماؤں اور کارکنوں کے خلاف پولیس کانسٹیبل کی ہلاکت کا مقدمہ درج کر لیا۔اس کے علاوہ پولیس نے ٹی ایل پی کے سربراہ اور دیگر رہنماؤں کے خلاف بھی دہشت گردی سمیت دیگر الزامات کے تحت مقدمہ درج کر لیا۔لاہور کی مرکزی شاہراہیں اور راستے بدستور بند ہیں جبکہ کراچی اور اسلام آباد میں بھی ٹریفک معمول سے کم ہے۔ لاہور میں پولیس، رینجرز اور ڈولفن فورس مستقل گشت کررہی ہیں جس کی وجہ سے شہر کے اندر صورتحال قابو میں ہے لیکن شہر سے باہر مضافات کے علاقوں میں تحریک لبیک کے کارکنان کا دھرنا جاری ہے۔ موٹر وے پولیس نے شہریوں کو تلقین کی کہ وہ غیر ضروری سفر سے گریز کریں جبکہ ایم-ون اور ایم-ٹو موٹر وے ہر طرح کے ٹریفک کے لیے بند ہے۔ملتان میں بہاولپور بائی پاس پر مظاہرین کا احتجاجی دھرنا جاری ہے اس دوران مظاہرین کی جانب سے پولیس اہلکاروں پر پتھراؤ کیا گیا جس کے نتیجے میں 4 پولیس اہلکار اور ٹی ایل پی کا ایک کارکن زخمی ہوئے۔ زخمی پولیس اہلکاروں کو نشتر ہسپتال منتقل کر دیا گیا جن میں ڈی ایس پی کینٹ جام سلیم بھی شامل ہیں۔