بھارتی کسانوں کااحتجاج کینیڈاتک پھیل گیا،لوک سبھاسفارشات مسترد

Muhammad Dastagir 24 Mar, 2021 عالمی

نئی دہلی:بھارت میں کسانوں کا کالے حکومتی قوانین کے خلاف احتجاج جاری ہے، لوک سبھا کمیٹی نے نئے ضابطے فوری نافذ کرنے کی سفارش کی جسے کسانوں نے رد کر دیا۔ کینیڈا میں بھی کاشتکاروں کے حق میں سیکڑوں افراد نے دھرنا دیا۔ بھارتی کسان مطالبات پر قائم ہیں، متنازع زرعی قوانین پر مودی کی ہٹ دھرمی بھی برقرار ہے۔ لوک سبھا کمیٹی نے نئے ضابطے فوری نافذ کرنے کی سفارش کی ہے، کسان تنظیموں نے رد عمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ سفارشات غیر منصفانہ ہیں، ان کی شدید مذت کی جاتی ہے۔ ہریانہ اور مشرقی پنجاب سے کسان ریلیوں کی صورت میں پیدل دھرنوں کی جگہوں پر پہنچے، دلی کے ارد گرد سنگھو اور ٹکری بارڈر پر آزادی کے ہیرو بھگت سنگھ کی یاد میں جلسے منعقد کئے گئے۔ کسانوں کا کہنا ہےمتنازعہ قوانین واپس کروا کر ہی دم لیں گے، جلسوں میں خواتین نے بھی بڑی تعداد میں شرکت کی، کینیڈا میں بھی بھارتی کاشتکاروں کے حق میں سیکڑوں افراد نے دھرنا دیا۔